24

گیس پر ہماری حکومتیں بات کررہی تھیں، امریکا روس سے سستا تیل طے کرنے پر ناراض ہوا، عمران خان

کراچی( ٹی وی رپورٹ)سابق وزیر اعظم و چیئرمین تحریک انصاف نے کہاہےکہ روس سےہمیں دعوت ملی،گیس سے متعلق ہماری حکومتیں پہلے سےبات کر رہی تھیں، امریکا روس سےتیل کم قیمت پر طےکرنے پر ناراض ہوگیا، افغان جنگ میں کامیاب نہ ہونے پر پاکستان کو مورد الزام ٹھہرایا گیا، سازش تیار ہوئی تو ہمارے میرجعفر اور میر صادق ان سے مل گئے، ہماری اشرافیہ بدقسمتی سے کرپٹ اور غلام بھی ہے،مہنگائی ریکارڈ سطح پر ہے، میڈیا سے پوچھتاہوں اب مائیک پکڑ کے عوام کے پاس کیوں نہیں جاتے؟۔سمندر پار پاکستانیوں سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ جولائی میں سمجھ گیا تھا کہ کچھ ہو رہاہے، امریکی سفارتخانے میں اپوزیشن رہنماؤں سے ملاقاتیں بڑھ گئی تھیں، ہمارے منحرفین سے ملاقاتیں شروع کردی گئی تھیں، ڈونلڈ لو نے دھمکی دی جو 22کروڑ پاکستانیوں کی توہین ہے، امریکا پھر سے اڈے بھی مانگ رہا تھا، کہا گیا عمران خان بچ گیا تو پاکستان کو نتائج کا سامنا کرنا ہوگا، دھمکی کےاگلے دن تحریک عدم اعتماد پیش کر دی گئی۔عمران خان کا کہنا تھا کہ حکومت کو ہٹانا ہی تھا تو ایسے لوگ لاتے جن کی ہم سے زیادہ اہلیت ہوتی، شہباز شریف اور ان کے لوگوں پر انڈر ٹرائل کیسز ہیں، باپ ضمانت پر ہے، بیٹاحمزہ چھوٹے چھوٹے پیسے پکڑتا تھا،کیا ایسے لوگوں کو الیکشن لڑنے کی اجازت دی جائے گی ؟ ہمارےملک پر کرپٹ ترین آدمی اورٹولے کو مسلط کردیا گیا، ن لیگ کاوزیر خود کہتاہے کہ اس پر 18لوگوں کے قتل کا مقدمہ ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ میڈیا سے پوچھتاہوں اب مہنگائی کہاں گئی؟ اب تو مہنگائی ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی ہے، اب مائیک پکڑ کے عوام کے پاس کیوں نہیں جاتے، 20 تاریخ کے بعد اسلام آباد کی کال دوں گا، مدینہ میں ان پر آوازیں لگیں اور ہم پر توہین مذہب کا کیس کردیا، یہ کہیں بھی چلے جائیں ،دو نعرے لگیں گے غدار اور چور۔ عمران خان نے کہاہےکہ میں کبھی اینٹی امریکا اور اینٹی یورپ نہیں رہا، ہم دوستی کرنا چاہتے ہیں غلامی نہیں، میرے ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کی انتظامیہ سے بہت اچھے تعلقات تھے، امریکیوں کو عادت پڑی ہے جو بھی کام ہوتا یہاں سے سلیوٹ مارا جاتا، میں دہشت گردی کے خلاف جنگ کی 15سال مخالفت کرتا رہا، ہمارے ایک سربراہ نے ایک دھمکی پر پاکستان کو ان کی جنگ میں شامل کردیا۔ پاکستان کا نائن الیون جنگ سے نہ لینا تھا نہ دینا، امریکا نے دھمکی دی کہ پاکستان کو پتھر کے دور میں پہنچا دیں گے، پاکستان کا لیڈر امریکی لیڈرکی دھمکی برداشت نہ کرسکا، پاکستان نے امریکا کی دہشت گردی کیخلاف جنگ کی سب سے بھاری قیمت ادا کی، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کے تین گنا فوجی شہید ہوئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں