206

کورونا وائرس سے متعلق اقدامات کی نگرانی کررہا ہوں، عوام کو گھبرانے کی ضرورت نہیں‘

وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ وہ کورونا وائرس سے متعلق اقدامات کی ذاتی طور پر نگرانی کررہے ہیں اور عوام کو گھبرانے کی ضرورت نہیں ہے۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری بیان میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ’میں کورونا وائرس سے متعلق اقدامات کی ذاتی نگرانی کر رہا ہوں، اس حوالے سے قوم سے جلد خطاب کروں گا‘۔
وزیراعظم نے مزید کہا کہ ’میں عوام سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ حکومت کی جانب سے جاری کردہ احتیاطی تدابیر پر عمل کریں‘۔

انہوں نے کہا کہ ’ کورونا سے نمٹنے کیلئے احتیاط کی ضرورت ہے گھبرانے کی نہیں‘۔

اپنی ٹوئٹ میں وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ ’ہم خطرے سے بخوبی آگاہ ہیں اور عوام کی صحت و سلامتی کو یقینی بنانے کیلئے حفاظتی اقدامات کر رہے ہیں، ڈبلیو ایچ او نے بھی ہمارے اقدامات کو سراہا ہے‘۔

آج اسلام آباد میں ایک اور کراچی میں کورونا وائرس کے مزید 2 کیسز سامنے آنے کے بعد ملک میں مریضوں کی مجموعی تعداد 31 ہو گئی ہے جبکہ دو مریض صحتیاب ہوچکے ہیں۔
خیال رہے کہ گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر ایران اور افغانستان کے ساتھ مغربی سرحدیں ابتدائی طور پر 14 روز کیلئے بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

وزارت داخلہ کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق سرحدوں کی بندش کا اطلاق 16 مارچ 2020 سے ہوگا۔ اس کے علاوہ 23 مارچ کو ہونے والی پریڈ بھی منسوخ کردی گئی ہے
اس کے ساتھ ساتھ ملک بھر میں 5 اپریل تک مدارس سمیت تمام تعلیمی ادارے بھی بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔

ملک میں تمام بڑے اجتماعات پر پابندی لگا دی گئی ہے، ریاست کے لیے لوگوں کے تحفظ سے بڑھ کر کچھ نہیں، شادی ہالز میں تقریبات پر دو ہفتوں کیلئے پابندی لگائی گئی ہے، دو ہفتوں کیلئے سینما گھروں اور تھیٹرز کو بند کیا جارہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں