PM IK cabinet meeting 149

چھوٹے کاروبار والوں کے لیے 75 ارب روپے کا ریلیف پیکیج منظور

وفاقی کابینہ نے بنیادی اشیائے ضروریہ کی برآمد پر دو ہفتوں کی پابندی عائد عائد کردی۔ چھوٹے کاروبار والوں کے لیے 75 ارب روپے کا ریلیف پیکیج منظور کرلیا گیا، کورونا سے متاثر صحافیوں کی مالی امداد اور ہیلتھ ورکرز کی مالی معاونت کے پیکیج بھی منظورکرلیے گئے ۔

وزیراعظم عمران خان نے وزارتوں کو کارکردگی بہتر بنانے کے لیے تھنک ٹینک قائم کرنے کی ہدایت کردی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیرِ صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا، جس میں کورونا صورتحال اور ملکی مجموعی صورتحال پر بات چیت ہوئی جبکہ اہم فیصلے بھی کیے گئے۔

وفاقی کابینہ نے 22 اور 27 اپریل کو ای سی سی اجلاس میں ہونے والے فیصلوں کی توثیق کردی۔

کابینہ نے مزدوروں کے لیے پہلے مرحلے میں 75 ارب روپے کے ریلیف پیکیج کی منظوری بھی دی گئی۔
وفاقی کابینہ نے بنیادی اشیائے ضروریہ کی برآمد پر دو ہفتوں کی پابندی عائد عائد کردی۔ چھوٹے کاروبار والوں کے لیے 75 ارب روپے کا ریلیف پیکیج منظور کرلیا گیا، کورونا سے متاثر صحافیوں کی مالی امداد اور ہیلتھ ورکرز کی مالی معاونت کے پیکیج بھی منظورکرلیے گئے ۔

وزیراعظم عمران خان نے وزارتوں کو کارکردگی بہتر بنانے کے لیے تھنک ٹینک قائم کرنے کی ہدایت کردی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیرِ صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا، جس میں کورونا صورتحال اور ملکی مجموعی صورتحال پر بات چیت ہوئی جبکہ اہم فیصلے بھی کیے گئے۔

وفاقی کابینہ نے 22 اور 27 اپریل کو ای سی سی اجلاس میں ہونے والے فیصلوں کی توثیق کردی۔

کابینہ نے مزدوروں کے لیے پہلے مرحلے میں 75 ارب روپے کے ریلیف پیکیج کی منظوری بھی دی گئی۔
کورونا وائرس کی ڈیوٹی کے دوران ہیلتھ کیئر ورکر کی موت پر اسے شہداء پیکیج دیا جائے گا، یہ پیکیج اسلام آباد، گلگت بلتستان اور آزاد کشمیر کے ہیلتھ ورکرز کے لیے ہے۔

وزیراعظم نے تمام وزارتوں کو کارکردگی کی بہتری کے لیے تھنک ٹینک قائم کرنے کی ہدایت کی ہے۔

اجلاس میں موجودہ حالات کے تناظر میں کھانے پینے کی ہر قسم کی اشیا کی برآمد پر پابندی کا فیصلہ بھی کیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں