46

پاکستان سیمی فائنل میں،افغانستان کو 5 وکٹوں سے شکست

ورلڈ کپ ٹی 20 کے گروپ 2 میں پاکستان نے افغانستان کو 5 وکٹوں کو شکست دے کر سیمی فائنلسٹ کی فہرست میں اپنی جگہ مضبوط کرلی ہے۔

افغان ٹیم کا 148 رنز کا ہدف گرین شرٹس نے 5 وکٹ پر ایک اوور قبل ہی حاصل کرلیا، آصف علی نے19 ویں اوور میں 4 چھکے لگاکر میچ جتوادیا، انہیں 7 گیندوں پر برق رفتار 25 رنز بنانے پر میچ کے بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

دبئی میں کھیلے جارہے میچ میں گرین شرٹس نے 2 وکٹوں پر 81 رنز بنالئے ہیں، 75 کے اسکور پر فخر زمان 25 گیندوں پر 30 رنز بناکر محمد نبی کا شکار بن گئے۔

فخر زمان اور کپتان بابراعظم نے دوسری وکٹ پر 63 رنز کا اضافہ کیا۔

پاکستان کی پہلی وکٹ 12 کے اسکور پر گری، محمد رضوان 8 رنز بناکر اونچا شارٹ کھیلنے کی کوشش میں باونڈی پر کیچ آوٹ ہوگئے اُن کی وکٹ مجیب الرحمان کے حصے میں آئی۔

اس سے قبل ورلڈ کپ ٹی20 کے سپر 12 مرحلے کے اہم میچ میں افغانستان نے پاکستان کو 148 رنز کا ہدف دے دیا ہے۔

افغانستان نے کپتان محمد نبی اور گلبدین نائب کے 35، 35 رنز ناٹ آؤٹ کی بدولت مقررہ 20 اوورز میں 6 وکٹ پر 147رنز بنائے ہیں۔

افغانستان کے ان دونوں بیٹسمینوں نے آخری 7 اوورز میں کوئی وکٹ نہیں گرنے دی اور اسکور میں71 رنز کا اضافہ کیا۔

ایک موقع پر افغانستان کے 6 کھلاڑی صرف 76 کے اسکور پر پویلین لوٹ گئے تھے اور ایسا لگتا تھا کہ افغانستان ٹیم 120 رنز بھی بمشکل ہی بناپائے۔

گرین شرٹس کے کپتان بابراعظم نے افغانستان کے خلاف 5 بولرز استعمال کیے، عماد وسیم نے 2، حارث رؤف، شاہین شاہ آفریدی، شاداب خان اور حسن علی نے 1،1 وکٹ اپنے نام کی۔

افغان ٹیم کی وکٹیں تیزی سے گررہی تھیں تاہم دوسری طرف انہوں نے اسکور میں اضافے کا سلسلہ جاری رکھا یہی وجہ تھی کہ آخری7 اوورز میں پریشر پاکستانی بولنگ لائن پر منتقل ہوگیا۔

پاکستان کی بولنگ لائن نے بھارت کی طرح افغانستان کے دونوں اوپنرز کو جلد ہی پویلین بھیج دیا تھا اور میچ پر گرفت مضبوط کرلی تھی، 12 رنز پر حضرت زازئی صفر اور محمد شہزاد 8 رنز بناکر میدان چھوڑ گئے۔

افغانستان کی تیسری وکٹ 33 کے اسکور اصغر افغان کی وکٹ گری، جو 10 رنز بناکر حارث رؤف کا شکار بنے۔

حسن علی نے 39 کے اسکور پر رحمان اللّٰہ گُر باز کو بابراعظم کی مدد سے قابو کیا، وہ بھی 10 ہی رنز بناسکے۔

افغانستان کی طرف سے 15 رنز بنانے والے کریم جنت کو 64 کے مجموعے پر عماد وسیم نے میدان سے واپسی کا راستہ دکھایا جبکہ 76 کے اسکور پر22 رنز پر کھیل رہے نجیب اللّٰہ زدران کو شاداب خان نے پویلین بھیج دیا ۔

یوں افغانستان کے 6 کھلاڑی 12اعشاریہ 5 اوورز میں 76 رنز پر میدان چھوڑ گئے ، ایسے کپتان نبی محمد اور گلبدین نائب نے عمدہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور پاکستانی بولنگ لائن کی ایک نہ چلنے دی۔

اس سے قبل افغانستان نے پاکستان کیخلاف ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا ہے۔

دبئی کرکٹ اسٹیڈیم پر کھیلے جارہے میچ میں افغانستان کے کپتان محمد نبی اور بابراعظم ٹاس کے لیے میدان میں اترے۔

اس موقع پر افغانستان کے کپتان نے ٹاس جیتنے کے بعد بیٹنگ کرنے کا بولڈ فیصلہ کیا جو اس بات کی علامت ہے کہ افغانستان کو اپنے بولرز پر بہت زیادہ اعتماد ہے۔

یہ اس گروپ کا اہم میچ ہے، آج کے میچ میں کامیابی کی صورت میں پاکستان کا سیمی فائنل کا سفر یقینی ہوجائے گا جبکہ افغانستان کی کامیابی کے صورت میں نیوزی لینڈ اور بھارت کا میچ اہمیت اختیار کرلے گا۔

پاکستان کی طرف سے افغانستان کے خلاف کپتان بابراعظم، محمد رضوان، فخر زمان، محمد حفیظ، شعیب ملک، عماد وسیم، آصف علی، شاداب خان، حسن علی، حارث رؤف اور شاہین شاہ آفریدی میدان میں اتریں گے۔

افغانستان کی طرف سے حضرت اللّٰہ زازئی، محمد شہزاد، اصغر افغان، رحمان اللّٰہ گُرباز، نجیب اللّٰہ زدران، محمد نبی، کریم جنت، گلبدین نائب، راشد خان، نوین الحق اور مجیب الرحمان میچ کھیل رہے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں