248

ساتویں سالانہ خاتون جنت کانفرنس۔ جامعہ نعیمیہ اسلام آباد

حضرت فاطمتہ الزہرا (س) کے یوم ولادت کو یوم خواتین کے طور پر منانے کا مطالبہ، نورالحق قادری نے کہا امہ کو فلاح کے لئے حضرت فاطمتہ الزہرا کی سیرت و کردار پر عمل پیرا اور بڑے اختلاف کم، چھوٹے اختلافات کو ختم کرنا ہوگا۔ تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں جامعہ نعیمیہ میں ساتویں خاتون جنت کانفرنس کا انعقاد کیا گیا، مقررین نے سیرت و کردار حضرت فاطمۃ الزاہرۃ سلام اللہ علیھا کی جانب توجہ مبذول کراتے ہوئے کہا کہ امت کی فلاح کے لئے اختلافات کو بھلا کر سیرت زہرا سلام اللہ علیھا پر عمل پیرا ہونے کی ضرورت ہے۔ اس موقع پر پیر نورالحق قادری نے اپنے خطاب میں سرعام پھانسی کے بارے میں پارلیمنٹ کی قرارداد پر سوال اٹھانے والوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ قرآن نے قصاص کا حکم دیا ہے، کیا انسانی حقوق کے نام نہاد علمبرداروں کو بچوں سے زیادتیاں نظر نہیں آتیں؟ سرعام پھانسی کی سزا انسانیت دشمنوں کو سبق سکھانے کے لئے ضروری ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ امہ کو فلاح کے لئے حضرت فاطمتہ الزہرا سلام اللہ علیھا کے سیرت و کردار پر عمل پیرا اور بڑے اختلاف کم، چھوٹے اختلافات کو ختم کرنا ہوگا۔ کانفرنس سے مفتی گلزار نعیمی، ڈاکٹر ثاقب اکبر، پیر صفدر گیلانی، علامہ حامد رضا اور مقصود جعفری سمیت دیگر مقررین نے خطاب کیا، اس موقع پر مطالبہ کیا گیا کہ حضرت فاطمتہ الزہرا سلام اللہ علیھا کے یوم ولادت کو یوم خواتین کے طور پر منانے کا اعلان کیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں