38

روس کا جوابی وار؛ ملک بھر میں فیس بک سمیت اہم سوشل میڈیا سائٹس بند کردیں

روس نے ملک بھر میں سماجی رابطوں کی مشہور ویب سائٹ فیس بک سمیت متعدد ایپلیکیشنز کو بلاک کر دیا ہے۔
غیر ملکی میڈیا کے مطابق روس نے یہ اقدام یوکرین اور دنیا کے دیگر حصوں سے معلومات کے بہاؤ کو روکنے لئے کیا۔

روسی حکام کا کہنا ہے کہ سوشل میڈیا پر ملک کے خلاف ڈس انفارمیشن اور نفرت انگیز پروپیگنڈہ کیا جا رہا ہے جس کو روکنا بے حد ضروری تھا۔

یوکرین پر حملے کے بعد امریکہ اور یورپی یونین کی جانب روس پر متعدد پابندیاں لگائی گئی ہیں۔

آج پیش ہونے والی ایک رپورٹ کے مطابق روس نے فیس بک، ٹوئٹر سمیت متعدد ایپ اسٹورز تک روسی عوام کی رسائی کو روک دیا ہے۔

بین الاقوامی میڈیا کے مطابق روس نے متعدد خبروں کی عالمی ویب سائٹس پر بھی پابندی لگا دی ہے۔

ایپ اسٹورز سپیگل کے صحافی میتھیو وان روہر نے آج ایک ٹوئٹ کیا ہے جس میں انہوں نے روس میں سوشل میڈیا پر پابندی کے حوالے سے خبر دی ہے۔

ان کے ٹویٹ کا جواب دیتے ہوئے لوگوں نے روس کے بارے میں بات کی ہے کہ وہ یوکرین اور دنیا کے دیگر حصوں سے معلومات کے بہاؤ کو روکنے کے لیے بڑے سوشل میڈیا پلیٹ فارمز کو بلاک کر رہا ہے۔

بہرحال روس کو گزشتہ چند دنوں میں امریکی حکومت کے ساتھ ساتھ یورپی کی جانب سے متعدد پابندیوں کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

یہاں تک کہ یورپی یونین نے بھی اپنی کمپنیوں کو کہا ہے کہ وہ روس میں اپنی مصنوعات کی فروخت بند کردے، جو کہ آخر کار کمپنی نے انٹرنیٹ پر لوگوں کے ردعمل کے نتیجے میں کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں