18

الیکشن آئندہ سال کے اختتام پر میعاد مکمل ہونے کے بعد ہونگے، آصف زرداری

اسلام آباد( رپورٹر) سابق صدر اور پیپلز پارٹی کے رہنما آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ ملک میں آئندہ عام انتخابات آئندہ سال کے اختتام پر موجودہ پارلیمنٹ کی میعاد مکمل ہونے کے بعد ہونگے اور نئے انتخابات تک موجودہ اتحاد کی حکومت اقتدار میں رہ کر عوام کی خدمت کرتی رہے گی۔
انہوں نے کہا کہ ایوان صدر ویران و برباد لگ رہا ہے، ہم جلد ہی جب یہاں آئیں گے تو اس برباد ایوان صدر کی رونق اور شان و شوکت بحال کردینگے۔
ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو ایوان صدر میں اپنے صاحبزادے بلاول بھٹو زرداری کی بطور وزیر خارجہ حلف برداری کی تقریب میں شرکت کے بعد ’’جنگ‘‘ کے خصوصی سنٹرل رپورٹنگ سیل سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔
قبل ازیں بلاول بھٹو زرداری نے وفاقی وزیر کی حیثیت سے حلف اٹھا لیا۔ حلف برداری کی تقریب بدھ کو یہاں ایوان صدر میں منعقد ہوئی، صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے ان سے ایک سادہ اور پروقار تقریب میں حلف لیا۔
جنگ سے گفتگو کرتے آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت کو ورثے میں ہولناک چیلنج ملے ہیں۔ قومی معیشت تباہ ہو کر رہ گئی ہے ملک گوناگوں مسائل سے دوچار ہے عوام مہنگائی سے نڈھال ہیں اور گزشتہ حکومت نے مل جل کر خارجہ تعلقات کو تباہ کرکے رکھ دیا ہے۔
سابق صدر نے کہا کہ ان تمام امور کو درست کرنے کیلئے حکومت کو وقت اور سخت محنت درکار ہوگی یہ توقع کی جانا چاہئے کہ حکومت میں شامل لوگ ملک کو ان تکالیف سے نجات دلانے میں اہم کردار ادا کرینگے۔
بعدازاں سابق وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی سے استفسار کیا گیا کہ آئندہ سال کے اختتام سے مراد دسمبر 2023ء میں انتخابات ہونگے تو انہوں نے کہا کہ اختتام اگست تک قومی اور صوبائی اسمبلیاں موجود رہیں گی اس طرح دسمبر کا مہینہ آسکتا ہے۔
آصف علی زرداری جو اپنے اکلوتے بیٹے بلاول کی حلف برداری پر بہت مسرور تھے اور یاد دلا رہے تھے کہ بلاول بھٹو زرداری ملک کے سب سے کم عمر ترین وزیر خارجہ بنے ہیں۔سابق صدر آصف علی زرداری سے دریافت کیا گیا کہ انہیں ایوان صدر کا ماحول کیسا لگ رہا ہے جس کے وہ پانچ سال سے زیادہ عرصے تک مکین رہ چکے ہیں۔
اس پر انہوں نے استہزائی انداز میں راہداریوں میں آویزاں عجیب و غریب تصاویر کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ ویران و برباد لگ رہا ہے قدرے توقف سے انہوں نے کہا کہ ہم جلد ہی جب یہاں آئیں گے تو اس برباد ایوان صدر کی رونق اور شان و شوکت بحال کردیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں