32

اقتدار کیلئے کسی کو پیسے اور وزارتیں نہیں دیں گے، وفاقی وزراء

اسلام آباد (ایجنسیاں) وفاقی وزراء نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کے منحرف اراکین اسمبلی سے کوئی سودے بازی نہیں ہوگی ‘اقتدار کیلئے کسی کو پیسے اور وزارتیں نہیں دیں گے ‘سندھ ہاؤس میں جو کچھ ہوا یہ ضمیر نہیں بلکہ روکڑے کی آواز ہے‘منحرف ارکان سے کوئی ڈیل کریں گے نہ کسی کی بلیک میلنگ میں آئیں گے‘گدھوں ‘گھوڑوں اور خچروں کی طرح بکنے والے بے شرم منحرفین سے کہنا چاہتے ہیں کہ یہ ووٹ تمہارے باپ کا نہیں عمران خان کا ہے‘ اگر شکایت ہے تو استعفیٰ دو اور دوبارہ الیکشن لڑو اور جیت کر واپس آؤ‘اپوزیشن ارکان بھی ہمارے رابطے میں ہیں ۔ قوم کے سامنے گندگی کھل کر سامنے آگئی ، عوام 27مارچ کے جلسے کی بھرپور تیار کرے ، پاکستان کی تاریخ بدلنے والا جلسہ ہوگا‘ سندھ حکومت غیر آئینی کام کررہی ہے ،سندھ میں گورنر راج لگانے کی کوئی بات نہیں ہوئی،آصف علی زرداری اور مسلم لیگ (ن) کے قائد نوازشریف کی ساری سیاست پیسے کے کھیل پر ہے۔ان خیالات کا اظہار وفاقی وزراء حماد اظہر‘فواد چوہدری اور اسد عمر نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اسد عمر نے کہا کہ وزیراعظم نے گزشتہ روز بتایا تھا کہ کس طرح سندھ ہاؤس میں پہلے نوٹ پہنچے ہیں اور ان نوٹوں کی جھنکار میں لوٹے پہنچے ہیں تو وہ آج نظر آگیا۔ چاہے کچھ بھی ہوتا رہے اور جتنی بھی ویڈیوز چلتی رہیں، عمران خان اپنے نظریے سے نہیں ہٹے گا۔تحریک انصاف پوری طرح مقابلہ جاری رکھے گی اور آخری وقت تک جاری رکھے گی‘ساری قوم دیکھ رہی ہے کہ یہ لوگ جمہوریت کا صرف نام استعمال کرتے ہیں، جمہوریت کے نام پر کاروبار کرنا چاہتے ہیں۔ عمران خان نے چھانگامانگا کی سیاست کی نہ آئندہ کبھی کریں گے۔اس موقع پر وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے کہا کہ ہرقسم کی بلیک میلنگ اور سودے بازی کو مستردکرتے ہیں‘آج کا چھانگا مانگا سندھ ہاؤس ہے، ارکان اسمبلی کو خچروں اورگھوڑوں کی طرح خریدا جا رہا ہے۔ایک خاتون ایم این اے کو7کروڑ روپے دیے گئے ہیں۔دریں اثناءسرکاری ٹی وی سے گفتگو میں چوہدری فواد حسین کا کہناتھاکہ سندھ ہاؤس اس وقت ہارس ٹریڈنگ کا مرکز بنا ہوا ہے،جس قسم کی ماورائے آئین خرید و فروخت کی منڈیاں لگی ہیں اس کے خلاف مضبوط ایکشن لیں گے۔وفاقی وزیر نے کہا کہ سندھ ہاؤس میں بہت سا پیسہ منتقل کرنے کی اطلاعات ہیں‘ حکومت اس کے خلاف مضبوط ایکشن کی منصوبہ بندی کر رہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں