ترک صدر 13 اور 14 فروری کو پاکستان کا دورہ کریں گے 185

ترک صدر 13 اور 14 فروری کو پاکستان کا دورہ کریں گے

وزیراعظم عمران خان فرروی میں ملائیشیا کا دورہ کریں گے جب کہ ہمسایہ دوست ملک ترکی کے صدر طبی اردگان پاکستان کا دورہ کریں گے۔طیب اردگان کے دورے کی تاریخ کا بھی اعلان کر دیا گیا ہے۔ترک صدر 13 اور 14 فروری کو پاکستان کا دورہ کریں گے۔وہ صدر مملکت عارف علوی، وزیراعظم عمران خان سمیت دیگر عسکری و سیاسی شخصیات سے ملاقاتیں بھی کریں گے۔
اس دوران پاک،ترک قیادت کی مشترکہ سربراہی میں اسٹریٹجک کو آپریشن کونسل کا اہم اجلاس بھی ہو گا۔ترک صدر بڑے کاروباری وفد کے ساتھ پاکستان آئیں گے۔ترک صدر پاکستان کے دورے کے دوران کئی اہم ملاقاتیں بھی کریں گے۔پاک ترک اعلیٰ تزویراتی کونسل کا اہم اجلاس بھی ہو گا۔ ترک صدر رجب طیب اردگان نے پاکستان کا دورہ کرنے کیلئے خواہش کا اظہار کر چکے ہیں۔

ترک صدر کا دورہ پاکستان گزشتہ ماہ اکتوبر میں شیڈول تھا جسے شام کی صورتحال کے باعث ملتوی کر دیا گیا تھا۔ شام کی صورتحال میں بہتری آنے کے بعد جلد ترک صدر طیب اردگان پاکستان کا دورہ کریں گے۔ امکان ظاہر کیا جا رہا ہے کہ ترک صدر کے دورہ پاکستان کے بعد دونوں ممالک کے دوستانہ اور برادرانہ تعلقات کا ایک نیا دور شروع ہو گا۔ علاوہ ازیں وزیراعظم ملائیشیا کا دورہ بھی کریں گے۔
عمران خان فروری کے پہلے ہفتے ملائشیا جائیں گے۔وزیراعمط ہم منصب مہاتیر محمد سے ملاقات کریں گے اور ملائیشیا کے سرمایہ کاروں کو سرمایہ کاری کی دعوت دیں گے۔۔دونوں رہنماؤں کے درمیان ہونے والی ملاقات بہت اہم تصور کی جا رہی ہے۔ملائیشین وزیراعظم سے ملاقات میں امت مسلمہ کے اتحاد پر بات چیت ہو گی۔ وزیراعظم عمران خان مہاتیر محمد کو ملائیشیا سمٹ میں عدم شرکت کی وجوہات سے آگاہ کریں۔
وزیراعظم عمران خان نے دورہ ملائیشیاء منسوخ کردیا تھا۔ملائیشیا میں 18 سے 20 دسمبر تک منعقد ہونے والے کوالالمپور (سمٹ) اجلاس میں وزیراعظم نے شرکت کرنی تھی۔ کوالالمپور سمٹ ملائیشیا کے وزیراعظم ڈاکٹر مہاتیر محمد کی سوچ ہے۔اس اجلاس میں ترک صدر رجب طیب اردوان، قطری امیر شیخ تمیم بن حماد الثانی اور ایران کے صدر حسن روحانی نے بھی شرکت کی تھی تاہم وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب کے دورے کے بعد دورہ ملائیشیا منسوخ کر دیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں