محکمہ ایکسائز 16

فیصل آباد‘محکمہ ایکسائز کو 7ماہ میں 1 ارب 64 کروڑ وصول

63 / 100

فیصل آباد‘محکمہ ایکسائز کو 7ماہ میں 1 ارب 64 کروڑ وصول
فیصل آباد حکومت پنجاب کی طرف سے رواں مالی سال 2020-21کے دوران پراپرٹی ٹیکس‘موٹروہیکلز ٹیکس‘پروفیشنل ٹیکس‘ ایکسائز ڈیوٹی‘تفریحی ٹیکس‘کاٹن فیس اور لگثرری ٹیکس کی مد میں 2ارب 50کروڑ62لاکھ 20ہزار روپے کا ٹارگٹ دیا گیا تھا جس پر محکمہ ایکسائز کی طرف سے پراپرٹی ٹیکس کے سالانہ ٹارگٹ ایک ارب 81کروڑ‘ 33 لاکھ کا 58 فیصد ایک ارب‘5کروڑ روپے جبکہ موٹروہیکلز ٹیکس کے سالانہ ٹارگٹ 46کروڑ 54لاکھ روپے کا 98فیصد 45کروڑ 83لاکھ 74ہزار روپے‘پروفیشنل ٹیکس کے ٹارگٹ 11کروڑ روپے کی مد میں 51فیصد 5کروڑ57لاکھ 95ہزار روپے ایکسائز ڈیوٹی کے ٹارگٹ 10کروڑ39لاکھ کا 80فیصد 8کروڑ 29لاکھ 43ہزار روپے‘کاٹن فیس کے ٹارگٹ 17لاکھ 30 ہزار کا 28 فیصد 4 لاکھ 81 ہزار روپے تفریحی ٹیکس کے ٹارگٹ 46لاکھ 40ہزار کا صرف 12فیصد 5لاکھ 64ہزار روپے اور لگثرری ٹیکس کا ٹارگٹ 68لاکھ 10ہزار کا 9فیصد 6لاکھ روپے وصول کرنے میں کامیاب ہوگیا ۔
ایکسائز ذرائع کا کہنا ہے کہ رواں مالی سال کے آغاز میں کرونا کے باعث شہریوں نے ای پے منٹ کے ذریعے 10فیصد رعائت کا بھرپورفائدہ اٹھایا اور حکومت پنجاب کی طرف سے موٹروہیکلز کی یونیورسل سیریزجاری ہونے پر سرمایہ کاروں نے دوسرے شہروں بالخصوص اسلام آباد یا لاہور کا رخ کرنیکی بجائے فیصل آباد ہی سے نئی گاڑیوں کی رجسٹریشن کروائی جس کے باعث فیصل آباد ایکسائز نے اپنے ٹارگٹ کا پہلے سات ماہ کے دوران 98فیصد حاصل کر لیا اس حوالے سے ڈائریکٹر ایکسائز احمد سعید کا کہنا تھا کہ گزشتہ سالوں کی نسبت ٹارگٹ نہایت شاندار رہا ہے امید ہے کہ فیصل آباد اپنے ٹارگٹ سے زائد ریکوری کرنے میں صوبہ بھر کے اضلاع میں بازی لے جائیگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں